Urdu Corner

باچا خان بابا کی انتیسویں برسی

1979497_676672542390924_1407468098_n

برصغیر میں انگریزوں کی آمد اور اس پہ قبضے کی داستان بہت دلچسپ بھی ہے اور حیرت انگیز بھی۔ ہزاروں کی تعداد میں آئیں اور کروڑوں کی تعداد میں انسانوں کو غلام بنایا ۔ ان کی اس حکمت عملی کو سمجھنے کےلئے اس دور کا سیاسی اور بالخصوص نفسیاتی جائزہ لئے بغیر ہم پوری طرح ان کی حکمت عملی کا ...

Read More »

پاک-سعودی تعلقات : برادرانہ یا فدویانہ ؟

ایمل خٹک

سابق آرمی چیف جنرل راحیل شریف کی 39 اسلامی ممالک پر مشتمل فوجی اتحاد کی کمان سنبھالنے کی خبر سے پاکستان میں کئ حوالوں سے زبردست بحث چڑ چکی ہے ۔ جس میں پاک – سعودی عرب تعلقات کے حوالے سے بھی کئی باتیں ھو رہی ہیں ۔ اس ضمن میں یہ سوالات بڑے اھم ہیں کہ پاک-سعودی تعلقات برا ...

Read More »

سٹرٹیجک ڈیپٹھ پالیسی کی افادیت اور مضمرات

ایمل خٹک

پاک-افغان تعلقات میں بڑھتی ھوئی کشیدگی اور تناؤ کے پیش نظر دونوں ممالک کے پالیسی ساز حلقوں میں تعلقات کو بہتر بنانے کیلئے غوروحوض ھو رہا ہے ۔ تعلقات کو بہتر بنانے کی خواھش کا اظہار اس امر سے بھی لگایا جاسکتا ہے کہ پچھلے دو ھفتوں میں پاکستان کے چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ اور افغان ...

Read More »

پاک-افغان تعلقات : دوسری اور تیسری قوت کا مخمصہ

ایمل خٹک

مسلہ افغانستان کے حوالے سے علاقے میں کھلم کھلا اور پردے کے پیچھے کئ سفارتی سرگرمیاں جاری ھیں ۔  ایک طرف افغان امن مذاکرات کے حوالے سے بیک ڈور ڈپلومیسی جاری ہے اور بہت سے دوست ممالک پاکستان اور افغانستان کے مابین رابطوں کی بحالی کیلئے کوشاں ھیں۔ دونوں ممالک کے درمیان سیاسی اور فوجی سطح پر رابطوں میں پیش ...

Read More »

پاک-سعودی تعلقات : برادرانہ یا فدویانہ ؟

ایمل خٹک

سابق آرمی چیف جنرل راحیل شریف کی 39 اسلامی ممالک پر مشتمل  فوجی اتحاد کی کمان سنبھالنے کی خبر سے پاکستان میں کئ حوالوں سے زبردست بحث چڑ چکی ہے ۔ جس میں پاک –  سعودی عرب تعلقات کے حوالے سے بھی کئی باتیں ھو رہی ہے ۔ اس ضمن میں یہ سوالات بڑے اھم ھیں کہ پاک-سعودی تعلقات برا ...

Read More »

پشتون نیشنل ازم : حکمت عملی کے حوالے سے چند سوالات ( آخری قسط )

ایمل خٹک

موضوعی صورتحال پر تفصیل سے بات ھوچکی ہے ۔ حکمت عملی کے حوالے سے تین رائے موجود ہے ۔ پہلی رائے موجودہ جغرافیائی فریم ورک کے اندر پشتونوں کی حقوق اور اس کیلئے جہدوجہد کی بات کرتی ہے۔ دوسری رائے والے موجودہ سسٹم سے مایوس اور قومی آزادی کی بات کرتے ھیں۔ ان کے مطابق موجودہ انتظام کے تحت حقوق ...

Read More »

پاکستان میں سوشل میڈیا کی گلہ گھونٹنے کی کوششیں/ ایمل خٹک 

ایمل خٹک

بچپن میں ایک کہانی سنتے تھے شہر ناپرسان کی ۔ اس شہر کا خاصہ یہ تھا کہ اس میں پھانسی کا پھندا اس شخص کو لگایا جاتا تھا جو جس کے گلے میں فٹ بیٹھتا تھا چاہے جرم اس نے نہ بھی کی ھو۔ مثال کے طور پر سزا الف کو ملتی اور اگر پھانسی کا پھندا اس کے گلے ...

Read More »

پشتون نیشنل ازم : نئے رحجانات اور اس کی وجوھات ( حصہ چہارم)

ایمل خٹک

پاکستان میں پشتونوں کو دیوار سے لگانے کی تمام لوازمات موجود ھیں ۔ بجائے اس کے کہ سنجیدگی سے آصلاح احوال کی کوششیں کی جاتی اور پشتونوں کے جائیز مطالبات پر سنجیدگی سے غور کیا جاتا اور حل کرنے کی کوشش کی جاتی۔ انتہائی منظم انداز میں اور دانستہ طور پر ” گل خان کلچر” کو فروغ دیا جارہا ہے ...

Read More »

پشتون نیشنل ازم : قومی آزادی سے صوبائی خودمختاری ( حصہ سوم)

ایمل خٹک

بہت سی سوشیو- پولیٹکل اور معاشی وجوھات کی بناء پر قومی آزادی کی سوچ کمزور ھوتی گئی ۔ اور قومی آزادی کی سوچ کی جگہ صوبائی خودمختاری کی سوچ غالب آتی گئی۔ سوچ میں یہ تبدیلی کسی سازش یا قیادت کی سوچ میں کسی فتور کی وجہ سے نہیں بلکہ ٹھوس معروضی وجوھات کی وجہ سے آئی۔ سیاست کوئی جامد ...

Read More »

پشتون نیشنل ازم : قومی آزادی کی تحریک / حصہ دوم

ایمل خٹک

 پاک وھند کی تقسیم سے پہلے انگریز سامراج کے دور میں پشتونوں میں آزادی کا تصور موجود تھا۔ اور یہ تصور بعد میں بھی کسی نہ کسی شکل میں موجود رہا۔ پاکستان بننے کے بعد پشتونستان تحریک ایک عملی تحریک سے زیادہ ایک خواب کی شکل میں موجود رہا۔ پاکستانی ریاست نے اپنی تنگ نظر سوچ اور ناعاقبت اندیش پالیسیوں ...

Read More »